انفوسِس کی نوکری چھوڑ، ایک جوڑے نے شروع کی کم آمدنی والے خاندانوں کے لئے تعلیمی تحریک

0


سنتوش مورے کی سوچ ہے کہ تعلیم نہ صرف ہندوستان بلکہ دنیا بھر میں کئی مسئلوں کا حل ہو سکتی ہے۔ اور وہ یہ سوچتے ہیں کہ وہ کس طرح اپنا چھوٹا سا کردار اس میں ادا کر سکتے ہیں۔ 2009 میں انہوں نے ٹيچ فار انڈیا کا اشتہار دیکھا جس میں تبدیلی کی پہلی پلٹن کو بلاوا دیا جا رہا تھا۔

انفوسس کی نوکری چھوڑنے کی بات اپنے والد کو سمجھانا ان کے لئے بڑی چیز تھی۔ سنتوش کے مینیجرو نے بھی ان سے کمپنی کے ساتھ منسلک رہنے کا مشورہ دیا۔ لیکن سنتوش نے اپنا فیصلہ کر لیا تھا۔ وہ ان دنوں کی یادیں تازہ کرتے ہوئے کہتے ہیں،

"یہ میرے آرام کے دائرے سے باہر نکلنے کے لئے ایک موقع تھا، جس کا خواب میں ہمیشہ دیکھا کرتا تھا"

سنتوش کو لگا کہ دو سال کی فیلوشپ صرف تعلیم کے بارے میں ہوگی لیکن یہ ایک تغیراتی سفر تھا۔ وہ کہتے ہیں، 'ان دو سالوں میں بہت سے مسائل پر میرے سوچنے کا نظریہ بدل گیا۔ میں نے ایسے ہندوستان کو دیکھا جس کے بارے میں شہری ہندوستانی بے خبر تھے۔ فیلو شپ سے مجھے سب سے بڑی چیز یہ حاصل ہوئی کہ کس طرح ایک تنظیم کو تیار کرنے کے لئے ویلیو چین کس طرح مدد کرتا ہے۔ 'سال 2012-13 میں سنتوش اور خوشبو (اس وقت دوست، اب بیوی) بنگلور کے باناشكري میں چند گھنٹے گزارتے تھے۔ یہ ایک جھگی بستی ہے۔ دیر شام دونوں کم آمدنی والے خاندانوں کے بچوں کو انگریزی سکھاتے تھے۔

شروعات

ایک ایسی ہی شام دونوں اس سوچ میں پڑ گئے کہ وہ اور کیا کر سکتے ہیں۔ انہیں کم فیس والے اسکول سے ایک دلچسپ تجویز ملی۔ انہیں خانگی اسکولوں میں تعلیمی کنوینر بننا تھا۔ سنتوش اور خوشبو کو یہ پتہ تھا کہ انہیں کچھ اپنا شروع کرنا ہے۔ انہیں اس بات کا انتخاب کرنا تھا کہ کیا انہیں نئے اسکول قائم کرنا ہے یا پھر جو موجودہ اسکول ہیں اسی کے ساتھ کام کرنا ہے۔ سنتوش کہتے ہیں، "اگر ہم اسکول کے آغاز کرتے تو ہم 10 سالوں میں 10000 طلباء کو متاثر کرتے یا پھر ہم ایسا اكوسسٹم بناتے جس سے موجودہ اسکولوں میں لاکھوں طالباء کو فائدہ ہوتا۔"

مارچ 2013 میں اس جوڑے نے مترا 4 چینج قائم کیا۔ ان کا مقصد موجودہ اسکولوں کے ساتھ کام کرنا تھا اور ایک ایسا بلو پرنٹ تیار کرنا تھا جو آخر میں ماڈل اسکولوں کے لئے رہنمایانہ اصولوں کے لئے کام کرے۔ خوشبو بتاتی ہیں، "کم فیس والے زیادہ تر اسکول، جن میں سرکاری اسکول بھی شامل ہیں، اچھی تعلیم فراہم کرنے کے لئے جدوجہد کرتے ہیں۔ کیونکہ اسکولوں کے پاس وسائل ناکافی ہوتے ہیں اور امداد کی کمی ہے۔ ہم اسی کمی کو دور کرنے کے لئے مترا 4 چینج میں کوشش کر رہے ہیں۔ "

کئی طرح کی كراوڈ فنڈنگ کے ذریعے دوستوں اور جاننے والوں نے اقتصادی مدد کی۔ پہلی بڑی ڈونیشن انفوسس کے ایكزكٹیو نائب صدر سنجے پروہت نے دی۔ اس کے علاوہ فنڈ انفوسس فاؤنڈیشن اور بہت ایچ این آئی سے بھی ملے ہیں۔ حال ہی میں سوپرنكا فاؤنڈیشن جس کی قیادت ایس ڈی شبولال کرتے ہیں، STEP (M4C کی طرف سے مداخلت پروگرام ہے) کے نفاذ کے لئے فنڈنگ کی۔ یہ پروگرام بنگلور کے 10 اسکولوں میں چلایا جا رہا ہے۔ STEP - دی اسکول ٹراسفرمیشن اینڈ ایمپاورمینٹ پروجیکٹ M4C میں اہم پہل ہے۔ یہ اسکول کے نظام میں تمام اہم اسٹیک ہولڈرز کو شامل کرتا ہے۔ اسکول انتظامیہ، اساتذہ، طالب علم، گارڈین اور کمیونٹی۔ یہ دو مراحل والا عمل ہے۔ پہلا مرحلہ ضرورت کا اندازہ ہے اور دوسرا مرحلہ عمل درآمد کا ہے۔

Target -ٹیلینٹ ركگنشن، انگیجمینٹ اینڈ ٹریننگ پروگرام

یہ ایک کمیونٹی ٹیچرس ٹریننگ پروگرام ہے۔ کمیونٹی کے پڑھے لکھے نوجوانوں کو تین ماہ کے لئے تربیت دی جاتی ہے اور اس کے بعد پارٹنر اسکول میں بطور ٹیچر مقرر کیا جاتا ہے۔ جگہ کا تعین کرنے کے بعد بھی ان ٹیچروں کو آن جاب ٹریننگ دی جاتی ہے۔ یہ ٹریننگ ایک سال کے لئے دی جاتی ہے۔ اس پروگرام کے ذریعے ایسے اساتذہ کو تلاش کیا جاتا ہے جو باصلاحیت ہیں اور ان کی مدد ایک بہتر استاد بننے میں کی جا سکے۔

PreCIOUS - شہیر سلم بستیوں میں رہنے والوں کے لئے پریونٹیو کیئر 

اس پروگرام کا مقصد کمیونٹی میں صحت کے بارے میں بیداری پھیلانا ہے۔ حفظان صحت، صفائی، غذائیت، حیض، اور تولیدی صحت، آنکھ وغیرہ کے بارے میں لوگوں کا باشعور کیا جاتا ہے۔

تعاون اور اثرات

مترا کا مطلب۔ میورک ایسوسی ایشن فار نولٹی، ٹراسفرمیشن اینڈ ریڈیکل اگیومینٹیشن ہے۔ اس کے لئے M4C عظیم پریم جی یونیورسٹی کے ساتھ مل کر کام کرتا ہے۔ یونیورسٹی کے طالب علم M4C کے ساتھ انٹرنشپ کرتے ہیں۔سنتوش کہتے ہیں کہ طالب علموں میں انگریزی اور ریاضی سیکھنے میں اوسطا 20 فیصد کا اضافہ دیکھا ہے۔

M4C کے اندرونی طور پر تیار ہر ٹیچر کی پیش رفت پر نظر رکھی جاتی ہے۔ خوشبو کہتی ہیں، اساتذہ کی ذہنیت اور تیاری کی سطح میں تبدیلی کے بہت اچھے نتائج سامنے آئے ہیں۔ وہ کلاس میں جدید تعلیمی تکنیک کے استعمال کی کوشش کر رہے ہیں۔ ہمارے اسکولوں میں کم از کم 70 فیصد اساتذہ کے علمی مہارت کی سطح میں بہتری کی حمایت کرنے کے لئے واضح ڈیٹا موجود ہیں۔M4C کا ایک اہم پہلو ہے مثبت اور محفوظ اسکولی ماحول بنانا ہے، جہاں اساتذہ، طلباء اور ایک جیسے ہر اسٹیک ہولڈر کے درمیان مسلسل سیکھنے کا ماحول فروغ دینے کی تعمیر ہے۔سنتوش کہتے ہیں کہ M4C کے لئے سب سے زیادہ دباؤ والا کام یہ ایک ایسی ٹیم بنانا ہے جو نہ صرف نئی ہو بلکہ تعلیم میں تبدیلی کی بھی کوشش کریں۔مترا فار چینج کا پنج منصوبہ ہے کہ کم از کم 100 اسکولوں تک پہنچا جائے اور 50000 بچوں کو STEP سے منسلک کیاجائے۔ سنتوش اور خوشبو کہتے ہیں وہ ہر بچے کا خواب شرمندہ تعبیر کرنا چاہتے ہیں جو معاشرے کے کسی بھی سطح کے ہونے کے باوجود اچھی تعلیم حاصل کرنے کا حق رکھتے ہیں۔

مصنفہ - سنگدھا سنہا