ویب سائٹ کی بنانے سے لے کر ڈیجیٹل مارکیٹنگ تک کے شعبے میں خود کے نشان چھوڑتی 'نيڈ ویب سائٹس'

0

بنیادی طور پر کولکتہ سے تعلق رکھنے والے کاروباری اندرا شيش چٹرجی ہمیشہ سے ہی خود کا انٹرپرائز قائم کرنے کا خواب دیکھتے تھے- اس خواب کو عملی جامہ پہنانے کی دھن میں انہوں نے ایک معروف کثیر القومی کمپنی کی ملازمت کو الوداع کہا اور سال 2013 میں 'نيڈ ویب سائٹ قائم کی- ان کے اس پلیٹ فارم نے چار ارکان کے ساتھ ایک انتہائی معمولی سی شروعات کی- انہوں نے اپنے کام کی شروعات غیر آئی ٹی علاقے میں ایک عمارت کے چھوٹے سے گودام سے کی - انٹرپرائز کی تنصیب سے لے کر شہر کے آئی ٹی ہب میں ایک اہم مقام حاصل کرنے تک کا ان کا یہ سفر اتار چڑھاؤ سے بھرا رہا ہے-

نيڈ-ویب سائٹس کے شریک بانی (co-founder) اندرا شيش کہتے ہیں، '' نيڈ-ویب سائٹس ایک بی 2 بی کی بنیاد پر پلیٹ فارم ہے جو عالمی سطح پر صارفین کی خدمات کے لئے تیار ہے – اس کی ساری توجہ سٹارٹپس، چاہے وہ چھوٹے ہوں یا بڑے، انہیں کفایتی قیمتوں پر آن لائن موجودگی درج کروانے میں مدد فراہم کروانا ہے- ہم نہ صرف مختلف پلیٹ فارم کی بنیاد پر پیشہ ورانہ ویب سائٹس کی تعمیر کرنے میں ماہر ہیں بلکہ ہم ڈیجیٹل مارکیٹنگ کے ساتھ- ساتھ ایپلی کیشنز ڈیولپمنٹ میں بھی مہارت رکھتے ہیں- ''

نيڈ-ویب سائٹس نے حال ہی میں کسٹمر ریلیشن مینجمنٹ اور انٹرپرائز ریسورس مینجمنٹ کے لئے سافٹ وئیر تیار کرنے کی سمت میں بھی اپنا قدم آگے بڑھایا ہے- یہ فورم مصنوعات اور سروس کی فراہمی ایک سائنسی طریقہ سے کرنے کے علاوہ نئے اپڈیٹس پر تحقیقی کام کرنے کے لئے ایک گرویدہ سیکشن ہونے کا دعوی کرتا ہے-

ان کا یہ فورم اپنے اخراجات خود پورا کرتا ہے- نيڈ-ویب سائٹس نے حال ہی میں امریکہ کے جارجيا میں کام کرنا شروع کیا ہے- اس کے علاوہ ان کا امریکہ کی کچھ ملٹی نیشنل کمپنیوں کے ساتھ مذاکرات کا دور بھی جاری ہے جو ایک آؤٹ سورسنگ پارٹنر کے طور پر ان کے ساتھ ہاتھ ملانے کے خواہاں ہیں-

اندرا شيش کہتے ہیں، '' زیادہ تر سرمایہ دار ای كامرس یا پھر مصنوعات کی بنیاد پر فورم میں سرمایہ کاری کرنے کے خواہاں رہتے ہیں- اب تک ہم سروس دینے والی کمپنی کے طور پر جانے جاتے تھے لیکن اپنے نئے مصنوعات اور سافٹ وئیر کی تخلیق کے بعد ہم بھی عالمی سطح پر مصنوعات (product)کو برانڈ کرنے کے لئے دستیاب پلیٹ فارم کے طور پر خود کو مستحکم کرنے میں کامیاب رہیں گے- ''

ان کا کہنا ہے کہ ہندوستان ایک تیزی سے ابھرتا ہوا بازار ہے اور حالیہ دنوں میں یہاں نئے تصورات کا استقبال ہو رہا ہے- او يو رومز، وڈو ، مبل، گریب ہاؤس سكوپس سمیت کئی دیگر اپکرم ( undertaking)حالیہ دنوں میں اپنی مخصوص تصورات کی وجہ سے بہترین سرمایہ کاری حاصل کرنے میں کامیاب رہے ہیں- نيڈ-ویب سائٹس کی تصور اتی ایپلی کیشنز سال 2016 تک اس گروپ کا ایک حصہ بننے کے لئے تیار ہے-

ترقی کی شرح

فی الحال ہندوستان میں 4 ارکان کی ٹیم سے بڑھ کر 16 رکنی ٹیم بننے کے بعد کمپنی کا ارادہ سال 2016 کے آغاز تک خود کو 30 رکنی تنظیم میں تبدیل کرنے کا ہے- اس کے علاوہ ان کے امریکہ کے دفتر میں بھی چار لوگوں کی ایک ٹیم کام کر رہی ہے-

اند راشيش کہتے ہیں، '' هم نے سروس مہیا ( provide)کرنے سے اپنے سفرکی شروعات کی تھی- تاہم هم نے حال ہی میں اپنا پروڈکٹ سیکشن قائم کیا ہے جو سافٹ وئیر اور ایپلی کیشنز ڈیولپمنٹ پر توجہ دے رہا ہے- سال 2016 تک 2 ملین امریکی ڈالر کی سرمایہ کاری کے ساتھ ہم اگلی بڑی چھلانگ کے لیے تیار ہیں- فی الحال 350 صارفین کے ڈیٹا بیس کے ساتھ نيڈ-ویب سائٹس آنے والے سال میں ایک ہزار صارفین کو اپنے ساتھ شامل کرنے کا مقصد سامنے رکھ کر آگے بڑھ رہی ہے- سال 17-2016 تک ہمارا ارادہ 5 لاکھ ڈالر سے زیادہ آمدنی حاصل کرنے کا ہے- ''

موجودہ چیلنجز

آج کے دور میں بازار کافی مسابقتی ہو چکا ہے اور کوئی بھی مصنوعات یا خدمات بغیر مناسب برانڈنگ یا مارکیٹنگ کے کامیاب نہیں ہو سکتی- اند راشيش کہتے ہیں، '' ہمارا سفر واقعی بہت مشکل رہا ہے- حالانکہ آج ہم جہاں کھڑے ہیں اسکی سب سے بڑی وجہ ہمارا مناسب مالی انتظام اور ترقی کی ساخت ہے- ''