اسٹارٹپس میں ہیں روزگار کے بہترین مواقع

0

ہر طرف اسٹارٹپس (تجارت کی ابتداء) موضوع بحث ہے۔ حکومت بھی اسٹارٹپ کے لئے نئی پالیسیاں بنا رہی ہے۔ سہولیات فراہم کر رہی ہیں۔ ایسے میں جب اسٹارٹپس اپنی کمپنی کا آغاز کر رہے ہیں تو روزگار کے مواقع بھی بڑھ رہے ہیں۔ ظاہر ہے نوجوان پُرجوش ہیں۔ ایسے میں دیکھا یہ بھی جا رہا ہے کہ نہ صرف کام کرنے والے بلکہ ملازمت دینے والوں میں بھی مختلف طرح کی حوصلہ افزائی ہے۔ وہ بھی ملازمین کے ساتھ اچھے رشتہ بنانے کے لئے طرح طرح کے منصوبے بنا رہے ہیں۔ ملازمین کو آمادہ کرنے کے لئے کوششیں کر رہے ہیں۔

بازار میں صلاحیتوں کی کمی کو دیکھتے ہوئے کچھ اسٹارٹپس نے نئے ملازمین کے لئی نیا پالیسی اختیار ہے۔ اس کے تحت ملازمین کو 'فری لُک' مدت دی جائے گی۔ اس کے تحت تمام نئے ملازمین کو کمپنی کی كارکردگی کو بہتر طریقے سے سمجھ کر کمپنی میں رہنے یا اسے چھوڑنے کا حق ہوگا۔

نئے خیالات والی کمپنیوں یعنی اسٹارٹپس میں ملازمین کو پہلے 30 دن جوڑے رکھنا انتہائی اہم ہے، کیونکہ کبھی کبھی کچھ ملازم بہتر تنخواہ کو دیکھتے ہوئے اس طرح کی کمپنیوں میں کام کرنے کا انتخاب کرتے ہیں، لیکن اکثر پہلے سے قائم کمپنیوں کے مقابلے کی ضرورت کے مطابق کام کرنا یا ترسیل دینا ان کے لئے مشکل ہوتا ہے۔

تعلیمی ٹیکنالوجی کمپنی سمپلی لرن نے 'فری لک پالیسی' اپنائی ہے۔ یہ پالیسی سینئر انتظامی سطح سمیت تمام سطحوں کی تقررات پر لاگو ہوتی ہے۔ اس کے تحت نئے ملازمین کو ان کی تربیت اور سمپلی لرن کے عمل اور طور طریقوں پر بنیادی طور پر توجہ دینے کی ضرورت ہوتی ہے۔

سمپلی لرن کے سی او او گیرالڈ جيديپ کا کہنا ہے- ''انشورنس علاقے میں 'فری لک' کی طرح ہم نئے ملازمین کو ہماری کام کے طور طریقے، روزگار پروفائل کے بارے میں فیصلہ کرنے کی آزادی دیتے ہیں اور انہیں خود اس کا اندازہ کرنے کا موقع دیتے ہیں کہ کیا وہ ذاتی اور پیشہ ورانہ معیار کو دیکھتے ہوئے کام کرنے کے لئے مناسب ہیں یا نہیں۔ ''

ماہرین کے مطابق بازار میں مقابلہ کافی زیادہ ہے جبکہ دوسری طرف صلاحیتوں کی کمی ہے، ایسے میں ملازمین کو متاثر کرنے اور ان کو ملازمت پر برقرار رکھنے کے لئے ایک بہتر حکمت عملی کی ضرورت ہے۔

پروپ ٹائیگر ڈاٹ کام اور مکان ڈاٹ کام کے چیف انسانی وسائل افسر روہت ہستير کا کہنا ہے، ''اس قسم کے 'آن بورڈنگ' پروگرام ملازمین پسند آئے ہیں اور ہمیں یقین ہے کہ اس کے ذریعے انہیں اچھا موقع ملے گا۔ ہم انہیں جوڑے رکھ پائیں گے۔ اس کا براہ راست اثر یہ ہوا ہے کہ پہلے 90 دن میں کمپنی چھوڑ کر جانے والوں کی تعداد کم ہوئی ہے۔ ''

مکان اور زمین کے بارے میں معلومات دینے والی پورٹل ہاؤسنگ ڈاٹ کام کے چیف انتظامی افسر اجے نائر کا کہنا ہے- ''جب آپ ملازمین کو اپنی کمپنی میں بنائے رکھنے نئی پالیسی کی لاگت کا تقابل روایتی انداز کے طور طریقے کی لاگت سے کرتے ہیں تو یہ کچھ زیادہ ہو سکتی ہے، لیکن اس سے ملازمین کو طویل مدت تک بنائے رکھنے میں مدد ملے گی۔ اس روزگار کے دوران جو غیر ضروری اخراجات ہوتے تھے، اس کی تلافی ہو جائے گی۔ '