آٹو رکشہ ڈرائیور کے بیٹے دھنواڑے نے کرکٹ میں لکھی تاریخ، 1009 رنز کا عالمی ریکارڈ

0

ممبئی کے نوجوان نے 1009 رن بنا کر عالمی ریکارڈ بنایا

15 سال کے دھنواڑے نے ممبئی کرکٹ ایسوسی ایشن کے بھنڈاری کپ انٹراسكول ٹورنامنٹ میں 323 گیندوں پر بنائے 1009 رن

دھنواڑے نے برطانیہ کےاے ای جے کولنز کے 628 رنوں کا ریکارڈ توڑا

ممبئی کے نوجوان کرکٹر پرنب دھنواڑے نے انٹر اسکول ٹورنامنٹ میں ناقابل شکست 1009 رن بنا کر نئی تاریخ رقم کی۔ وہ کرکٹ کی تاریخ میں چار پوائنٹس کا اسکور بنانے والے دنیا کے پہلے بلے باز بن گئے ہیں۔ کےسی گاندھی ہائر سیکنڈری اسکول کے طالب علم 15 سالہ دھنواڑے نے ممبئی کرکٹ ایسوسی ایشن کی طرف سے منعقد بھنڈاری کپ انٹراسكول ٹورنامنٹ میں آریہ گروكل کے خلاف صرف 323 گیندوں پر یہ اسکور بنایا اور ان کا اسٹرائک ریٹ 312.38رہا۔ دھنواڑے نے 395 منٹ تک جاری رہی اپنی اس اننگز میں 129 چوکے اور 59 چھکے جمائے۔ ان کی اس تاریخی اننگز کا خاتمہ اس وقت ہوا جب ان کی ٹیم نے تین وکٹ پر 1495 کے اسکور پر اننگز ختم کرنے کا اعلان کیا۔ یہ بھی عالمی ریکارڈ ہے۔

دھنواڑے کی اسکول نے وکٹوریہ کے نيوساوتھ ویلز کے خلاف 1926 میں بنائے گئے 1107 رنز کے ریکارڈ کو پیچھے چھوڑ دیا۔ دھنواڑے کے نام پر اب کرکٹ میں ایک اننگز میں سب سے زیادہ اسکور کا ریکارڈ درج ہو گیا ہے۔ انہوں نے برطانیہ کے اےاي جے کولنز کا کلارک ہاؤس کے خلاف نارتھ ٹاؤن میں 1899 میں بنائے گئے رنز 628 رنز کے ریکارڈ کو توڑا۔ دسویں میں پڑھنے والا پرنب ایم سی اے کے تجربہ کار کوچ موبن شیخ کا شاگرد ہے اور وہ اٹوركشا ڈرائیور کا واحد بیٹا ہے۔ تھانے کے قریب فلاح و کلیان کے وايلنگر میدان پر کھیلے گئے میچ میں ان کی ٹیم نے یہ بڑا اسکور اپنے مخالف کے 17 اوور میں 31 رن پر آؤٹ ہونے کے جواب میں بنایا۔

اپنی اننگز کے دوران انہوں نے ہندوستانی اسکولی کرکٹ میں 546 رن کے سب سے زیادہ انفرادی اسکور کے ریکارڈ کو پیچھے چھوڑ دیا۔ یہ ریکارڈ ممبئی کے ایک اور کرکٹر زمین شا نے 2013 میں حارث شیلڈ میچ میں رضوی اسپرنگ فیلڈ کی طرف سے سینٹ فرانسس دی ایسیسی کے خلاف بنایا تھا۔

بڑے بلے باز سچن تندولکر نے دھنواڑے کو اس کارکردگی پر مبارک باد دی ہے۔ سچن نے اپنے ٹوئٹر ہینڈل پر لکھا،

'' پرنب دھنواڑے کو ایک اننگز میں 1000 سے زیادہ رن بنانے والا پہلا بلے باز بننے پر مبارک ہو۔ شاباش اور محنت کرو۔ آپ کو بھی نئی بلندیوں پر پہنچنا چاہئے۔ ''

دھنواڑے کے کوچ شیخ نے کہا،

'' دھنواڑے جب چھ سال کا تھا تب سے میرے پاس ہے۔ ان کے اس کارکردگی سے اس علاقے میں کرکٹ کو کافی فروغ ملے گا۔ کلیان کے ارد گرد ہمارے یہاں کافی صلاحیتیں ہیں، لیکن مناسب سہولیات نہ ہونے سے یہ کھلاڑی آگے نہیں بڑھ پا رہے ہیں۔ آج: سابق ہندوستانی کپتان اور ایم سی اے کے نائب صدر: دلیپ وینگسارکر آئے اور انہوں نے میدان فراہم کرنے پر یہاں اکیڈمی کھولنے کا وعدہ کیا۔ ''

انہوں نے کہا، '' یہ انڈر۔ 16 میچ کے لئے مناسب میدان تھا اور ٹورنامنٹ ایم سی اے سے تسلیم شدہ ہے۔ میں مخالف ٹیم کے رویہ سے بھی خوش ہوں۔