'اسٹارٹپس میں 2015 کی پہلی سہ ماہی میں ملے 1.7 ارب ڈالر

0

وزیر اعظم نریندر مودی کی منصوبہ بندی اسٹارٹپ اور اسٹینڈ انڈیا کا اثراب نظر آنے لگا ہے۔ اسٹارٹپس کے لئے مسلسل بنائی جا رہی نئی پالیسیوں کا اثر بھی صاف صاف دکھائی دے رہا ہے۔ یہی وجہ ہے کہ 2015 کی پہلی سہ ماہی میں اسٹارٹپس نے 1.7 ارب ڈالر جمع کرنے میں کامیابی حاصل کی ہے۔

وزیر مواصلات روی شنکر پرساد نے نے بتایا کہ جدت طرازی کی حمایت کے لئے بنائے گئے پالیسی ڈھانچے کی وجہ سے ملک کے اسٹارٹپ نے اس سال کی پہلی سہ ماہی میں 1.7 ارب ڈالر جمع کئے ہیں.

پرساد نے ڈیجیٹل انڈیا كنكلیو کے دوران کہا، '' اس سال کی پہلی سہ ماہی میں ہندوستانی اسٹارٹپس نے 1.7 ارب ڈالر جمع کرنے میں کامیابی حاصل کی ہے۔ یہ رقم 2014 کی پہلی سہ ماہی میں حاصل کی گئی 45 کروڑ ڈالر کی رقم سے 300 فیصد زیادہ ہے۔''

اس موقع پر صنعتی پالیسی اور فروغ محکمہ: ڈی آئی پی پی کے سیکرٹری امیتابھ كانت نے کہا کہ ہندوستان کونالیج پر مبنی معیشت کی ویلیو چین میں آگے بڑھنے کے لئے ضروری ہے کہ اس کی جدت پسندی کے ساتھ ساتھ میک ان انڈیا اور بلکہ ڈیزائن اور 'کرئیٹ ان انڈیا 'پر بھی توجہ دیں۔