اسٹارٹپ کے لئے حوصلہ افزاء ماحول بنانے کرناٹک حکومت ہر ممکن مدد کے لئے تیار: پریانک کھرگے

0

کرناٹک کے انفرمیشن، یہ اور ٹورزم منسٹر پريانك كھرگے نے کہا کہ کرناٹک میں اسٹارٹپس کے لئے بہت ہی شفاف طریقے سے تعاون کرے گی۔ وزیر موصوف بینگلور میں یور اسٹوری کی جانب سے منعقد ٹیكسپاركس 2016 کی افتتاحی تقریب سے خطاب کر رہے تھے۔ اس موقع پر اپنے خطاب میں انہوں نے کہا کہ نئے تاجرو اور کاروباری تحقیقی کاموں کو حكومت ہر ممکن مدد کرے گی۔

پريانک كھرگے کرناٹک کے آئی ٹی بی ٹی اور ٹورزم منسٹر ہیں۔ انہوں نے کہا کہ' پلان بی ہی پلان بینگلورو' ہے اور اس سے اسٹارٹپس کی دنیا میں کئی نئی تبدیلیاں آئیں گی۔ انہوں نے کہا کہ حکومت کا اسٹارٹپ سیل اسٹارٹپس کو ضروری فنڈس فراہم کرنے کے مقصد سے اہم کام کر رہا ہے۔ بینگلور کو دنیا کا آئی ٹی ہب بنانے کے مقصد سے حکومت نے 1999-2000 میں آئی ٹی پالیسی بنائی تھی۔ بعد کی حکومتوں نہ اس میں وقت وقت پر بہی لاتے ہوئے اس شہر کو آئی ٹی سٹی اور سلیکون ویلی آف انڈیا بنانے کے لئے ضروری اقدامات اٹھائے۔ انہوں نے بتایا کہ حال ہی میں شہر پر سرمایہ کاروں کے لئے 'بند سٹی' ہونے کا جو ٹیگ لگا تھا، وہ عارضی تھا اور بہت جلد شہر اپنی پرانی حالت پر لوٹ آیا ہے. اس سال حکومت نے ہدف رکھا ہے کہ 400 کروڑ روپے کی لاگت سے اسٹارٹپس قائم کئے جائیں اور آنے والے دو سالوں میں یہ رقم 2000 کروڑ روپے ہو جائے گی۔ اگر ایسا ہوتا ہے توکرناٹک اس سے ملک میں ملٹی سیكٹورل فنڈ میں سب سے بڑا ہو جائے گا۔

وزیر نے کہا کہ بنگلورو میں 4000 فعال اسٹاٹپ ہیں اور گزشتہ دو سالوں میں 1 بلین ڈالر انہوں نے حاصل کئے ہیں۔ منگلورو، میسورو اور اڈپی جیسے شہروں نے بھی کافی اہم کامیابی حاصل کی ہے، جہاں 25 سے 30 ملین ڈالر کی سرمایہ کاری حاصل کیا گیا ہے۔

یور اسٹوری کی سی ای او شردھا شرما کی ایک بات کا جواب دیتے ہوئے انہوں نے کہا کہ اسٹارٹپ میں کافی جدوجہد کرنا پڑتا ہے اور یہ بڑا چیلنج ہے، لیكن انہیں امید ہے کہ جو لوگ اس سے باہر آ رہے ہیں، ایک بار پھر اس کاروبار سے جڑیں گے۔

كھرگے نے کہا کہ حکومت کی جانب سے ایسے اسٹارٹپس کے لئے آن اسپاٹ پیکیج دیے جائیں گے جو لوگ کرناٹک اسٹارٹپ سیل کے ساتھ رجسٹر کریں گے، ان کو جنگل لاج، رسارٹ اور کرناٹک کے 16 مقامات پر پراپرٹیز کے ساتھ جوڑنے کی کوشش کرے گی۔

وزیر نے کہا کہ اسٹارٹپ سیل نے 9 اكيوبیشن سینٹر شروع کیے ہیں۔ انہوں نے دو پیٹینٹ بھی حاصل کئے ہیں۔ اس سے حوصلہ افزائی پاکر حکومت 20 شہروں میں طلباء کے لئے اكيوبیشن سینٹر قائم کرنے کا منصوبہ بنایا ہے۔ انہوں نے بتایا کہ حکومت پی پی پی ماڈل پر ٹیک بزنس اكيوبیٹرس کی بھی حوصلہ افزائی کر رہی ہے ۔ کرناٹک حکومت ہر نئے خیال پر اسٹارٹپس کو 50 لاکھ روپے دینے کا سہولت رکھتی ہے۔ سیاحت کے ساتھ کام کرنے والی کمپنیوں کو حکومت نے الگ سے تعاون دینے کا اعلان کیا ہے اور حال ہی میں آٹھ کمپنیوں کو 1.80 کروڑ روپے دیے گئے ہیں. الگ سے 2.5 کروڑ روپے دینے کی تیاری سیاحت محکمہ کر رہا ہے۔

Related Stories